28 January 2023
  • 9:48 pm Rammas: Meet DEWA’s virtual employee
  • 9:36 pm Punjab’s caretaker cabinet refuses salaries, stay in official residences
  • 9:36 pm Salman Khan gets court order against KRK
  • 9:35 pm US passes bill limiting drawdowns from strategic oil reserve
  • 9:35 pm موجودہ نظام ملکی مسائل حل کرنے میں ناکام ہوگیا، شاہد خاقان عباسی
Choose Language
 Edit Translation
My-Ads
Spread the News

عالمی ادارے انڈپنڈنٹ مانیٹرنگ بورڈ نے پنجاب میں عثمان بزدار اور خیبرپختونخوا میں محمود خان کی انسدادِ پوليو مہم کی کاوشوں کوناکافی قرار دے ديا۔

رپورٹ میں لاہور میں رواں برس جنوری اور مارچ کی انسداد پولیو مہم کوانتہائی غیر اطمینان بخش قرار دیا گیا جب کہ گزشتہ برس خیبرپختونخوا کی انسداد پولیو مہم بھی غیر تسلی بخش رہی۔

رپورٹ کے مطابق پاکستان میں چیف سیکرٹریز اور ڈپٹی کمشنرز کے بار بار تبادلوں کی وجہ سے انسداد پولیو مہمات شدید متاثر ہورہی ہیں۔

ملک میں پنجاب کے سب سے زیادہ متاثرہ اضلاع میں 100 فیصد بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلانے میں ناکام رہے۔

رپورٹ میں انکشاف ہوا کہ پاکستان میں پیدائش کے وقت اب بھی بچوں کی بڑی تعداد پولیو سے بچاؤ کے قطروں سے محروم ہے۔

کراچی،کوئٹہ، لاہور اور پورے خیبرپختونخوا میں انسداد پولیو ٹیمیں بچوں تک پہنچ نہیں پارہی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق پنجاب حکومت نے صوبے میں بچوں کی بڑی تعداد پولیو سے بچاؤ کے قطروں سے محروم رہ جانے کا بھی اعتراف کیا ہے۔

رپورٹ میں تجویز دی گئی کہ پاکستان کے انسداد پولیو پروگرام ایسے بچوں کو ڈھونڈنے کے لیے جامع پلان ترتیب دیں جو قطروں سے محروم ہیں اور وفاقی اور صوبائی حکومتیں بھی انتظامیہ کو تمام ترمعاونت فراہم کریں۔

Abdul Gh Lone

RELATED ARTICLES